طارق انور این سی پی چھوڑی، لوک سبھا سیٹ سے استعفیٰ دیا

کٹیہار، 28ستمبر,ہ س:
رافیل ڈیل پر نیشنلسٹ کانگریس پارٹی(این سی پی)کے قومی صدر شرد پوار کے ذریعہ وزیر اعظم نریندر مودی کے دفاع میں جمعرات کو دیئے گئے بیان سے این سی پی کے قومی جنرل سکریٹری طارق انور نے خود کو پارٹی سے پوری طرح الگ کر لیا ہے۔ وہ بہار کی کٹیہار سے لوک سبھا سیٹ سے رکن پارلیمنٹ ہیں۔
جمعہ کے روز کٹیہار میں پریس کانفرنس کر طارق انور نے پارٹی کی رکنیت سے انہوں نے استعفیٰ دینے کا اعلان کر دیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے اپنی لوک سبھا سیٹ سے بھی استعفیٰ دے دیا ہے۔ پریس کانفرنس کے دوران انہوںنے کہا کہ وزیر اعظم نریند رمودی پوری طرح سے رافیل ڈیل میں ملوث ہیں اور وہ اب تک خود کو پاک صاف ثابت کرنے میں ناکام رہے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ فرانس کے سابق صدر کے ذریعہ اس سلسلہ میں دیئے گئے بیان سے رافیل ڈیل میں گھوٹالے کی تصدیق ہوتی ہے۔ انہوںنے کہا ایسی صورتحال میں پارٹی صدر شرد پوار کا بیان نریندر مودی کے دفاع میں ہے جس سے میں پوری طرح غیر متفق ہوں اور پارٹی و لوک سبھا سیٹ سے استعفیٰ دے رہا ہوں۔ طارق انور نے کہا کہ شرد پوار کا میں ذاتی طور پر احترام کرتا ہوں لیکن اس مدعہ پر ان کے بیان کو غیر مناسب سمجھتا ہوں۔

 

آپ ہمیں اپنی ہر طرح کی خبریں،مضامین،مراسلات اور ادبی تحریریں ارسال کریں۔۔۔ہم انھیں آپ کے نام کے ساتھ www.aakashtimes.com پرشائع کریں گے۔۔۔۔۔۔ادارہ

رابطہ:aakashtimes0@gmail.com