اسمتھ ایشز سیریز میں تین سنچریاں بنانے والے پہلے آسٹریلوی کپتان

میلبورن،31- دسمبر:آسٹریلوی ٹیم کے کپتان اورا سٹار بلے بازا سٹیون اسمتھ عمدہ بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے عظمت کی بلندیوں کی جانب گامزن ہیں، وہ 79 برس بعد انگلینڈ کے خلاف ایشز سیریز میں تین سنچریاں بنانے والے پہلے آسٹریلوی کپتان بن گئے ہیں۔بطور کپتان تیز ترین 15 سنچریاں بنا کر پہلے آسٹریلوی کرکٹر کا اعزاز بھی پا لیا، دو مرتبہ کیلنڈر ایئر میں 6 یا زائد سنچریاں بنانے والے نہ صرف آسٹریلیا بلکہ دنیا کے دوسرے بلے باز ہیں، ہوم ٹیسٹ میچوں میں 3 ہزار رنز بھی مکمل کر لئے ۔اسمتھ نے انگلینڈ کے خلاف چوتھے ایشز ٹیسٹ میچ کی دوسری اننگز میں ناقابل شکست سنچری بنا کر کارنامہ انجام دیا۔ا سمتھ نے انگلینڈ کے خلاف چوتھے ایشز ٹیسٹ کی دوسری اننگز میں شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کیا اور سنچری اسکور کی، یہ ان کی رواں سیریز میں تیسری سنچری ہے ۔اس کے ساتھ ہی وہ 79 برس کے بعد ایشز سیریز میں تین سنچریاں جڑنے والے پہلے آسٹریلوی کپتان بن گئے ہیں۔اس سے قبل 1938 میں ڈان بریڈمین نے یہ کارنامہ انجام دیا تھا، یہ اسمتھ کی بطور کپتان 15ویں ٹیسٹ سنچری ہے ، انہوں بطور قائد تیز ترین 15 سنچریاں بنانے والے پہلے آسٹریلوی کرکٹر کا اعزاز بھی پا لیا۔ اسمتھ نے 53 اننگز میں سنگ میل عبور کیا جب کہ اسٹیو وا نے 74 اننگز میں کارنامہ انجام دے رکھا تھا، اس کے ساتھ ساتھ ا سمتھ دو مرتبہ کیلنڈر ایئر میں چھ یا زائد سنچریاں بنانے والے نہ صرف آسٹریلیا بلکہ دنیا کے دوسرے بلے باز ہیں۔اسمتھ نے 2015 اور 2017 میں چھ، چھ سنچریاں بنائیں جبکہ اس سے قبل صرف پونٹنگ کو یہ اعزاز حاصل تھا جنہوں نے تین مرتبہ یہ سنگ میل عبور کر رکھا ہے ، پونٹنگ نے 2006 میں7 سنچریاں بنائی تھیں جب کہ 2003 اور 2005 میں چھ، چھ سنچریاں بنائی تھیں، اس کے علاوہ ا سمتھ نے ہوم ٹیسٹ میچوں میں 3 ہزار رنز بھی مکمل کر لئے ، وہ ہوم ٹیسٹ میچ میں تیز ترین کارنامہ انجام دینے والے ڈان بریڈمین کے بعد دوسرے آسٹریلوی کھلاڑی بن گئے ہیں۔انہوں نے 49 اننگز میں اعزاز حاصل کیا جب کہ بریڈمین نے 37 ہوم ٹیسٹ اننگز میں سنگ میل عبور کر کے عالمی ریکارڈ اپنے نام کر رکھا ہے جب کہ اسمتھ 49 اننگز میں کارنامہ انجام دے کر سابق پاکستانی بلے باز جاوید میانداد کے ہم پلہ ہو گئے ہیں، انہیں بھی ہوم ٹیسٹ میچوں میں 3 ہزار رنز مکمل کرنے میں 49 اننگز لگیں تھیں۔

 

آپ اپنی خبریں،مضامین اورمراسلات aakashtimes0@gmail.com پر ارسال کریں۔۔۔ہم اسے آپ کے نام سے شائع کریں گے۔