تمام مذاہب کو ایک ساتھ لاکر اجودھیا میں مندر بنائیں گے: تیج پرتاپ

پٹنہ،10مارچ،ہ س:لالو پرساد یادو کے بڑے بیٹے اور بہار کے سابق وزیر صحت تیج پرتاپ یادو نے بہار کی سیاست کو ایک مرتبہ پھر گرم کردیا ہے۔ انہوں نے بی جے پی کونشانہ بناتے ہوئے کہا اجودھیا میں رام مندر کی تعمیر کو لے کر کہا کہ اگر اگلی بار بہار میں راشٹریہ جنتا دل کی حکومت بنی تو ملک کے تمام مذاہب کے ساتھ مل کر بہار سے ایک۔ ایک اینٹ یوپی لے جائیں گے اور وہاں رام مندر بنائیں گے۔
تیج پرتاپ نے کہا، ‘ہندو، مسلم، سکھ، عیسائی، انتہائی پسماندہ، غریب، دلت سب وہاں جائے گا اور ایک ایک اینٹ رکھے گا۔ ہم رام مندر بنانے کا کام کریں گے۔ جس دن مندر بن گیا، اسی دن بی جے پی اور آر ایس ایس کا خاتمہ ہو جائے گا۔ جب ان کے پاس کوئی مدعا نہیں رہ جائے گا تو پھر وہ چمچ لے کر تھالی بجاتے رہیں گے۔
دراصل، نالندہ ضلع کے مگھڑا گاو¿ں میں مشہور شکتلااشٹمی میلے کے موقع پر دنگل مقابلہ کا انعقاد کیا گیا تھا۔ اس مقابلے کا آغاز سابق وزیر صحت تیج پرتاپ یادو نے بگل اور بانسری بجا کر کیا۔ دنگل مقابلہ دیکھنے کے لئے سینکڑوں کی تعداد میں افراد موجود تھے۔ اس دوران تیج پرتاپ نے بڑا بیان دیتے ہوئے کہا کہ بی جے پی ملک میں تو رام مندر بنانے کے نام پر لوگوں کے ووٹ لینے کا کام کرتی ہے، لیکن رام مندر بنانے میں پیچھے بھاگ جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر اگلی بار بہار میں راشٹریہ جنتا دل کی حکومت بنی تو ملک کے تمام مذاہب کے ساتھ مل کر بہار سے ایک۔ ایک اینٹ یوپی لے جائیں گے اور وہاں رام مندر بنائیں گے۔حالانکہ بعد میں انہوں نے اپنے بیان سے پلٹتے ہوئے ٹوئیٹ کرکے کہا کہ ہم نے بہار شریف دنگل پروگرام میں یہ کہا کہ بی جے پی والے رام مندر بنانے کی بات کرتے ہیں پر تاریخ نہیں بتائیںگے۔ ہم لوگ مندر ایسا بنائیں گے جہاں ہندو مسلم سکھ عیسائی سب لوگ جاکر پوجا کریں گے۔ انسانیت کا مندر بنائیں گے تب بی جے پی کا مندر کا مدعا ختم ہوجائے گا۔

 

آپ ہمیں اپنی ہر طرح کی خبریں،مضامین،مراسلات اور ادبی تحریریں ارسال کریں۔۔۔ہم انھیں آپ کے نام اور فوٹو کے ساتھ www.aakashtimes.com پرشائع کریں گے۔۔۔۔۔۔ادارہ

رابطہ:aakashtimes0@gmail.com