رمضان میں دہشت گردوں کے خلاف فوج نہیں کریگی آپریشن

نئی دہلی،17۔مئی ،ہ س:مرکزی وزارت داخلہ نے اعلان کیا ہے کہ رمضان کے مہینے کو دیکھتے ہوئے سیکورٹی دستہ کشمیر میں دہشت گردوں کے خلاف آپریشن بند رکھیں گے۔ اس کے لئے جموں وکشمیر کی وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی نے مرکزی حکومت سے اپیل کی تھی۔ وزارت داخلہ نے اپنے پیغام میں کہا کہ امید ہے کہ اس کے اس قدم سے پرامن مسلمان اپنا تہوار بغیر کسی پریشانی کے مناسکیں گے۔
وزارت داخلہ نے سیکورٹی فورسیز سے کہا ہے کہ وہ جموں و کشمیر میں رمضان کے مہینے میں اپنی کارروائی کو روک دیں۔ تاہم اگر سیکورٹی فورسیز پر حملہ کیا جاتا ہے تو فوج جوابی کارروائی کرنے کا پورا حق رکھتی ہے۔خیال رہے کہ محبوبہ مفتی نے مرکزی حکومت سے رمضان المبارک اور امرناتھ یاترا کے پیش نظر دہشت گردوں کے خلاف یک طرفہ سیز فائر کرنے کی اپیل کی تھی۔ وزیر اعلی محبوبہ مفتی کا کہنا تھا کہ مرکزی حکومت دہشت گردوں کے خلاف یک طرفہ سیز فائر کا اعلان کرے ، جیسا کہ واجپئی جی نے 2000 میں کیا تھا۔
وزیر اعلی کے مطابق دہشت گردوں کے خلاف کارروائی سے عام لوگوں کو بھی کافی پریشانیاں ہوتی ہیں۔ انہوں نے کہا تھا کہ عید اور امرناتھ یاترا کے پیش نظر ہماری کوشش پرامن حالات بنائے رکھنے کی ہے۔

 

آپ ہمیں اپنی ہر طرح کی خبریں،مضامین،مراسلات اور ادبی تحریریں ارسال کریں۔۔۔ہم انھیں آپ کے نام اور فوٹو کے ساتھ www.aakashtimes.com پرشائع کریں گے۔۔۔۔۔۔ادارہ