تہاڑ جیل میں مذہبی ہم آہنگی کا بہترین مظاہرہ ،59 ہندو قیدیوں کا مسلمانوں کیساتھ روزہ

نئی دہلی ،28مئی ، ہ س:رمضان کے مبارک مہینے میں دارالحکومت نئی دہلی کی تہاڑ جیل میںمذہبی ہم آہنگی کا بہترین نظارہ دیکھنے کو مل رہا ہے جہاں مسلم قیدیوں کے ساتھ بڑی تعداد میں ہندو قیدی بھی روزہ رکھ رہے ہیں۔ان ہندو قیدیوںمیں خواتین بھی شامل ہیں ۔یہ غیر مسلم قیدی اپنے اپنے مختلف مقاصد کے تحت روزے رکھ رہے ہیں۔
واضح رہے کہ جیلوں میں قید مسلم قیدیوںکے لئے رمضان کے مہینے میں خاص انتظام کیا جاتا ہے اور مسلمان قیدی جو روزہ رکھنا چاہتے ہیں وہ جیلوں میں پورے اہتمام کے ساتھ روزے رکھتے ہیں ۔ان کے لئے باقاعدہ نماز ،سحری اور افطاری کا انتظام کیا جاتا ہے ۔اس بار بھی حسب سابق تہاڑ جیل میں مسلم قیدیوں نے بڑی تعدا د میں روزہ رکھ رہے ہیں ۔اچھی بات یہ ہے کہ مسلم قیدیوں کے ساتھ غیر مسلم بھی روزہ رکھ رہے ہیں۔ذرائع کے مطابق تہاڑ جیل میں مسلمانوں کے ساتھ روزہ رکھنے والے غیر مسلم قیدیوں کی تعداد 59 ہے جو اپنے 2299 ساتھی مسلمان قیدیوں کے ساتھ روزہ رکھا،ان ہندو قیدیوں میں خواتین قیدی بھی شامل ہیں۔تہاڑ کے علاوہ دہلی کے مختلف جیلوں میں 97غیر مسلم قیدی ہے جو روزہ رکھ رہے ہیں۔
ایک 45 سالہ خاتون ہندو قیدی کا کہنا ہے کہ انہوں نے یہ روزہ جیل سے باہر موجود اپنے بیٹے کی سلامتی اور خیر خواہی کے لیے رکھا ہے۔کچھ قیدیوں نے روزہ اس عقیدے اور جذبے کے تحت رکھا کہ وہ اس کی برکت سے جلد جیل سے رہا ہو جائیں گے۔تہاڑ جیل کے علاوہ دیگر بھارتی جیلوں میں بھی مسلمانوں کے علاوہ ہندو قیدیوں نے ماہ رمضان میں روزہ رکھا۔ شدید گرمی کے باوجود مختلف جیلوں میں بند 97 ہندو خواتین قیدیوں نے بھی رمضان میں روزے رکھے۔جیلوں میں قید ہندو قیدیوں نے اپنے ساتھی مسلمان قیدیوں سے اظہار یک جہتی کیلئے یہ روزے رکھے۔غیر مسلم قیدیوں کے روزہ رکھنے کے سلسلے میں ایک جیل افسر نے نام نہ شائع کرنے کی شرط پر بتایا کہ یہاں پر مختلف معاملوں میں قیدی آتے ہیں ۔بہت سے قیدی ہوتے ہیں جو اپنے راستے تبدیل کرنے کی کوشش کرتے ہیں ۔کچھ قیدی ایسے بھی ہوتے ہیں جو مذہب ہو جاتے ہیں اور ان کے اندر تبدیلی پیدا ہو جاتی ہے۔تہاڑ جیل کے ڈائریکٹر جنرل اجے کشیپ نے کہا کہ رمضان کا مہینہ شروع ہونے سے قبل ایککو آر ڈینیشن کمیٹیکی میٹنگ کی گئی تھی جس میں رمضان سے متعلق انتظامات کے سلسلے میں غور و خوض کیا گیا تھا۔انہوںنے بتایاکہ جیل میں افطار کے وقت کے لئے اسپیشل ڈسپلے لگایا گیا ہے ۔اس کے علاوہ کھجور اور روح افزا کا بھی افطاری کے لئے خاص انتظام کیا گیا ہے ۔روزہ داروں کو نماز کے لئے بھی جگہ کا انتظام کیا گیا ہے ۔قیدیوں کے ضابطے میں روزہ داروں کے لئے خاص رعایت کی گئی ہے ۔روزہ داروں کے ساتھ افطاری میں تمام جیل کے سپرنٹنڈت کو شرکت کرنے کی ہدایت دی گئی ہے ۔گزشتہ روز دہلی میں 45 ڈگری درجہ حرارت ریکارڈ کیا گیا، سخت گرم موسم میں روزہ رکھنے والے قیدیوں کیلئے جیل حکام نے موسم کی سختی سے بچنے کیلئے خصوصی انتظامات کیے تھے۔

 

آپ ہمیں اپنی ہر طرح کی خبریں،مضامین،مراسلات اور ادبی تحریریں ارسال کریں۔۔۔ہم انھیں آپ کے نام اور فوٹو کے ساتھ www.aakashtimes.com پرشائع کریں گے۔۔۔۔۔۔ادارہ